Blog Literature Urdu

آپکا انتظار کر دیکھا

آپکا انتظار کر دیکھا

سر پہ یہ بھی الزام دھر دیکھا

آپ وفا میں بے وفا ٹھہرے

یہی روش شام وسحر دیکھا

اک ہی قسمت ملی دیوانوں کو

سنگ اور وہ بھی ہے بہ سر دیکھا

اک روایت چلی میخانے سے

جسے ہر جا و ہر نگر دیکھا

پہلے وعدوں پہ اعتبار تھا دل

اب کے وعدوں کو بھی گزر دیکھا

پھر سے مجنوں کے پیر صحرا میں

تیری گلی میں نہ ادھر دیکھا

Leave a Reply

Ready to get started?

Are you ready
Get in touch or create an account.

Get Started