kalam e muattar
Urdu,  ادب,  شاعری

بعدالتِ عشق

میں بھی تو تجھ سے پیار کرتا ہوں

کاش! اک بار کہو، میرے ہو

جان تجھ پر نثار کرتا ہوں

نقش کا کاروبار کرتا ہوں

ہر میخانے سے کہاں پیتا ہوں

تیرے پیمانے کا شیدائی ہوں

محشرِ دل میں ہنگامے لاکھوں

شاعری ہے زباں زمانے کی

تم معطر کو جانتے ہو کیا

کاش! اے یار کہو میرے ہو

Leave a Reply