kalam e muattar
Urdu,  ادب,  شاعری

میرے الزام میں کہاں جاؤں

’’دلِ ناکام میں کہاں جاؤں‘‘ جون ایلیا

میرے الزام میں کہاں جاؤں

لب و رخسار قصئہ ماضی

الفتِ جام میں کہاں جاؤں

مجھ سے ناراض فقیہانِ شہر

شہرِ گمنام میں کہاں جاؤں

جامِ جم، تختِ سلیمان و اِرم

سے ہے کیا کام میں کہاں جاؤں

ذات زندان کی صورت ہو تو

ایسی ہو شام میں کہاں جاؤں

Leave a Reply