جہاد اک واضح آئیڈیالوجی

Sale!

$25.00

  • File Size: 2.0 MB
  • Length: 200 pages
  • Publisher: ANish Publications
  • Publication Date: November 11, 2017
  • Language: Urdu

Description

جہاد اک واضح آئیڈیالوجی

اسلام اور انسانیت۔کی بقاء صرف اور صرف جہاد کی آئیڈیالوجی سے وابسطہ ہے۔ جو نفس سے شروع ہو کر سماج اور پھر اپنے نفس تک آکر۔ختم ہوتا۔ہے۔ نظامِ ظُلم۔و طاغوت نے اگر اسلام و مسلمانوں کے ساتھ جو ظُلم کیا یے تو سب سے عظیم ظُلم یہ ہے کہ روحِ اسلامِ نابِ محمدیؐ جہاد اُن کے تن سے نکال دیا ہے۔ تبھی یہ ہر جگہ ظلم سے دب رہا ہے۔ اک جہادی اور مقاومت و مبارز قوم و ملت پر کوئی اتنی آسانی سے ہاتھ نہیں ڈال سکتا کیونکہ درد دینے والوں کو درد تبھی محسوس ہوتا ہے جب اُنہیں وہی درد ملے۔ اگر دُنیا نے شروع تیر و تلوار سے کیا ہے تو اُنہوں نے اعلان کر دیا ہے کہ وہ کونسی زبان بولتے اورسمجھتے ہیں اور جواب بھی اُسی زبان میں چاہتے ہیں۔

عالمی استعمار کی پسپائی اور بلاخر نابودی مظلوم اقوام کی فتح یابی اور عالمی امن کا طریقہ و وسیلہ صرف اسی ایک راہ میں ہے۔

مذہبی نفسیات کے بانی ارکان میں سے معطر علی کسی تعارف کے محتاج نہیں۔ بیک وقت دینی اور دنیاوی اعلٰی تعلیم سے بہرور ایک ماہرِ نفسیات کی جہاد کے متعلق روح پرور اور فکر کُشا حقائق و نفسیاتی پہلوؤں سے پردہ سرکاتی ہوئے انوکھی اور انمول تحریر ہے جو کہ ہر سنجیدہ اور حُریت پسند انسان کے ذہن کو کھول کر اُسے جہاد اور اس کے ثمرات و نتائج و عواقب سے آگاہ کرکے دعوتِ جہاد دیتی ہے۔

اعترافاتِ باغی میں اک جگہ کہتے ہیں۔ ’’میں ہر اُس حُریت پسند انسان کا حامی و ناصر ہوں جو ظُلم و جبر کی کسی بھی شکل کے خلاف کسی بھی طریقے سے جہاد کر رہا ہے۔ اگرچہ ہمارا طریقہ الگ ہے مگر میں میدانوں کی تبدیلی کو اتنا اہم نہیں سمجھتا۔ میں اس عالمی نفسیاتی جنگ میں اک جرنل کی طرح کھڑا عالمی استعمار سے قلم کے ذریعے جہاد میں مصروف ہوں کہ یہ ۲۱ویں صدی واقعی نفسیاتی عالمی جنگ کی صدی ہے اور میں ہر مظلوم فرد و قوم و نسل کے ساتھ کھڑے ہوکر شانہ بشانہ لڑ رہا ہوں۔ میرے بساط میں بس یہی کچھ یے اور یہ شعور کے سنبھالنے سے لے کر اب تک اور خُدا کرے آخری سانس تک جاری رہے۔ اس جنگ میں کسی کی قومیت، لسانیت، علاقائیت اور مذہبیت کے ذہنی تفریق میں کبھی نہیں اُلجھا نہ ہی الجھنے کا کوئی کوئی امکان ہے۔‘‘

اس کتاب میں مندرجہ ذیل موضوعات پر مصنف نے سیرِ حاصل بحث کی ہے۔

کتاب خریدنے کے لیئے ایڈ ٹو کارڈ پر کلک کریں مصنف کی مزید کتابیں خریدنے کے لیے اس لنک پر کلک کریں۔

Leave a Reply